فلسطینیوں کے خلاف پرتشدد کارروائیاں روکے جانے کے لیے بھرپور کوششوں کی ضرورت ہے، شاہ سلمان

ریاض: سعودی فرماں رواں شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے کہا ہے کہ مسئلہ فلسطین کے حوالے سے سعودی عرب کا موقف ثابت قدمی پر مبنی ہے، فلسطینیوں کے خلاف پرتشدد کارروائیاں روکے جانے کے لیے بھرپور کوششوں کی ضرورت ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے فلسطینی صدر محمود عباس سے ٹیلی فونک گفتگو کرتے ہوئے کیا، شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے قابض اسرائیلی فوج کے ہاتھوں بدترین جارحیت میں نہتے فلسطینیوں کی شہادت اور بے قصور مظاہرین کے زخمی ہونے پر سخت مذمت کا اظہار کیا۔

شاہ سلمان نے کہا کہ مملکت بین الاقوامی قراردادوں اور عرب امن منصوبے کے مطابق فلسطینیوں کے قانونی حقوق واپس دلانے کے حوالے سے اپنی حمایت جاری رکھے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ مملکت عرب لیگ کے وزراء خارجہ کے ایک ہنگامی اجلاس کا مطالبہ کرتی ہے تاکہ فلسطینی عوام کے تحفظ کے لیے مطلوبہ اقدامات کو یقینی بنایا جاسکے۔

دوسری جانب فلسطینی صدر محمود عباس نے شاہ سلمان بن عبدالعزیز کے گراں قدر جذبات پر ان کا شکریہ ادا کیا اور مملکت سعودی عرب کے عوام اور حکومت کی جانب سے فلسطینی عوام کی مکمل سپورٹ پر خراج تحسین پیش کیا ہے۔

خیال رہے کہ گذشتہ روز امریکی سفارت خانے کی تل ابیب سے مقبوضہ بیت المقدس منتقلی کے خلاف مشرقی یروشلم کی سرحد پر ہزاروں کی تعداد میں فلسطینی عوام مظاہرہ کرنے کے لیے جمع ہوئے تھے، جس پر صیہونی افواج کی جانب سے مظاہروں کو روکنے کےلیے وحشیانہ طاقت استعمال کیا گیا ہے۔

احتجاج کرنے والے نہتے فلسطینیوں پر اسرائیل کی دفاعی افواج کی فائرنگ سے 63 شہری شہید اور 2700 سے زائد زخمی ہوئے تھے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

This post is shared by PakPattani.com For Information Purpose Only

اپنا تبصرہ بھیجیں