ڈبلن ٹیسٹ: آئرلینڈ کی بیٹنگ لائن ریت کی دیوار ثابت ہوئی

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption پاکستان کی جانب سے محمد عباس نے چار وکٹیں حاصل کیں

ڈبلن میں پاکستان اور آئرلینڈ ‌کے مابین واحد ٹیسٹ کرکٹ میچ کے تیسرے دن آئرلینڈ کی ٹیم فالو آن کا شکار ہوگئی ہے۔

آئرلینڈ نے فالو آن کے بعد اپنی دوسری اننگز میں بغیر کسی نقصان کے 64 رنز بنائے ہیں اور تیسرے دن کے اختتام پر اس کو پاکستان کی پہلی اننگز کا خسارہ ختم کرنے کے لیے 116 رنز درکار ہیں۔

آئرلینڈ ‌کی ٹیم اپنی پہلی اننگز میں پاکستان کی پہلی اننگز کے سکور 310 رنز کے جواب میں 130 رنز پر ڈھیر ہوگئی۔

سنہ 2002 میں نیوزی لینڈ کے خلاف لاہور میں کھیلے گئے ٹیسٹ میچ کے بعد یہ پہلا موقع ہے کہ کوئی ٹیم پاکستان کے خلاف فالو آن کا شکار ہوئی ہے۔

ٹیسٹ میچ کے تیسرے دن پاکستان نے اپنی پہلی اننگز 310 رنز نو کھلاڑی آؤٹ پر ڈیکلیر کر دی تھی۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

اپنا پہلا ٹیسٹ میچ کھیلنے والی آئرلینڈ کی ٹیم کی پہلی اننگز کا آغاز اچھا نہ تھا اور محض سات کے سکور ان کے چار کھلاڑی پویلین لوٹ چکے تھے۔

آئرلینڈ کے تین بلے باز اینڈریو بالبرنی، اور این او برائن بغیر کوئی رن بنائے آؤٹ ہوئے جبکہ کیون او برائن 40 رنز کے ساتھ نمایاں رہے۔

پاکستان کی جانب سے محمد عباس نے چار، شاداب خان نے تین، محمد عامر نے دو جبکہ فہیم اشرف نے ایک وکٹ حاصل کی۔

کرکٹتصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption آئرلینڈ کے تین بلے باز اینڈریو بالبرنی، کین اور کیون او برائن بغیر کوئی رن بنائے آؤٹ ہوئے

اس سے قبل پاکستان نے اپنے گذشتہ روز کے سکور 268 چھ کھلاڑی آؤٹ پر اپنی پہلی اننگز کا دوبارہ آغاز کیا تو شاداب خان اور فہیم اشرف نے عمدہ بیٹنگ کرتے ہوئے سکور میں مزید اضافہ کیا۔

مزید پڑھیے

ڈبلن ٹیسٹ کا دوسرا دن شاداب اور فہیم اشرف کے نام

آئرلینڈ کے خلاف میچ ہو اور 2007 کا ورلڈ کپ ذہن میں نہ آئے

پاکستان بمقابلہ آئرلینڈ: ’تاریخ نہ دہرانے کا سنہری موقع‘

فہیم اشرف 83 رنز کے ساتھ اننگز کے ٹاپ سکورر رہے جبکہ شاداب خان نے 55 اور اسد شفیق نے 62 رنز کی اننگز کھیلی۔

آئرلینڈ کی جانب سے ٹم مرتاغ نے چار، ٹامسن نے تین اور بوئد رینکن نے دو وکٹیں حاصل کیں۔

خیال رہے کہ ٹیسٹ میچ کا پہلا روز خراب موسم اور بارش کے باعث ضائع ہو گیا تھا۔

آئر لینڈ کے خلاف ٹیسٹ میچ کے بعد پاکستان 24 مئی سے انگلینڈ کے خلاف دو ٹیسٹ میچوں کی سیریز کھیلے گا اور تین ٹی ٹوئنٹی میچ سکاٹ لینڈ میں کھیلے گا۔

This post is shared by PakPattani.com For Information Purpose Only

اپنا تبصرہ بھیجیں