راناثنااللہ کا خواتین سے متعلق بیان، شہباز شریف نے معافی مانگ لی

وزیر قانون پنجاب راناثنااللہ کا پی ٹی آئی کی خواتین سے متعلق بیان پر مسلم لیگ ن کے صدر و وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف نے معافی مانگ لی، شہبازشریف نے کہا کہ کسی کی دل آزاری ہوئی تومعذرت خواہ ہوں۔

وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف نے کہا کہ کوئی بھی بیان جس سے پاکستان کی سیاست میں خواتین کے کردار کی نفی ہو اور ان کی تذلیل ہو وہ غیر ذمہ دارانہ ہے، ہمیں سیاست میں شائستگی اور احترام کے عنصر کو برقرار رکھنا چاہیے۔

شہباز شریف نے اپنی ٹوئٹ میں کہا کہ ’بعض پارٹی رہنماؤں کی جانب سے دیے جانے والے خواتین مخالف بیان پر میں معذرت خواہ ہوں‘۔

اس سے قبل تحریک انصاف کے رہنما علی زیدی نے رانا ثناء کو 48گھنٹے کی مہلت دی تھی کہا تھا کہ پی ٹی آئی کی خواتین سے معافی مانگیں اگر معافی نہ مانگی تو دھرنا ہوگا، علی زیدی نے سوال کیا کہ کیا مریم نواز راناثناء جیسوں کو شوکاز دیں گی؟۔

علی زیدی نے کہا کہ پی ٹی آئی کی خواتین جدوجہدمیں شانہ بشانہ کھڑی رہیں، راناثناءاللہ کا بیان مسلم لیگ ن کاپرانا وتیرہ ہے۔

تحریک انصاف کے رہنما علیم خان نے کہا ہے کہ ن لیگ میں موجود خواتین رانا ثنا کو اس بات جوتیاں کیوں نہیں ماری، ن لیگی قیادت کو ایسے بیانات دینے پر شرم آنی چاہیے۔

تحریک انصاف کی تنقید پر وزیرقانون پنجاب راناثناء نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف اپنےگریبان میں جھانک کردیکھے، کیاعائشہ گلالئی کسی کی بیٹی نہیں ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ کیا عمران خان نے اس کو میسجز بھیج کر ہراساں نہیں کیا، عمران خان معافی نہ مانگیں اپناموبائل ہی سرنڈرکردیں، پی ٹی آئی قیادت اس پرمعافی مانگے، میں بھی معذرت کرلیتا ہوں۔

یاد رہے کہ صوبائی وزیر رانا ثناء اللہ نے پی ٹی آئی کے 29 اپریل کے جلسے میں شریک خواتین کے حوالے سے نامناسب الفاظ کہے تھے جن کی گزشتہ روز پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان نے بھی شدید مذمت کی تھی۔

This post is shared by PakPattani.com For Information Purpose Only

اپنا تبصرہ بھیجیں