برطانوی وزیرداخلہ ایمبررڈ نے استعفیٰ دے دیا

لندن : تارکین وطن کی ملک بدری اسکینڈل پربرطانوی وزیر داخلہ ایمبررڈ نے استعفیٰ دے دیا، وزیراعظم تھریسا مے نے استعفیٰ منظور کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق ایمبررڈ نے گزشتہ ہفتے برطانیہ کی داخلی امورکمیٹی کے سامنے کہا تھا کہ وہ برطانیہ سے ممکنہ طورپربے دخل کیے جانے والے افراد کے کوٹے کی فہرست سے لاعلم ہیں۔

ایمبررڈ کے انکار پربرطانوی اخبار نے انہی کے ہاتھ سے لکھا میمو شائع کردیا جس میں ایمبر رڈ نے لکھا تھا کہ بے دخل کیے جانے والے افراد کا کوٹہ مختص کردیا گیا ہے۔

برطانوی اخبارکے انکشاف کے بعد ایمبررڈ نے وزارت داخلہ کے عہدے سے استعفیٰ دے دیا جسے برطانوی وزیراعظم تھریسا مے نے منظورکرلیا۔

خیال رہے کہ اپوزیشن لیڈر اور لیبر پارٹی کے سربراہ جیرمی کوربن اور لندن کے میئرصادق خان نے بھی ایمبر رڈ سے استعفی کا مطالبہ کیا تھا۔


برطانوی وزیردفاع عہدے سے مستعفی

یاد رہے کہ گزشتہ سال 2 نومبر کو برطانوی وزیردفاع مائیکل فالن نے خاتون صحافی کو جنسی طور پرہراساں کرنے کے الزام پر اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا۔


برطانوی نائب وزیراعظم ڈیمیئن گرین عہدے سے مستعفی

واضح رہے کہ 21 دسمبر 2017 کو کمپیوٹر سےغیراخلاقی مواد برآمد ہونے کےاسکینڈل میں ملوث برطانوی نائب وزیراعظم ڈیمیئن گرین نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

This post is shared by PakPattani.com For Information Purpose Only

اپنا تبصرہ بھیجیں